اہم ترین

بہزادؔ لکھنوی:منفرد لب و لہجہ کا شاعر

انہوں نے نعت گوئی سے قبل صنف شاعری کے دیگر اصناف سخن پر بھی خوب طبع آزمائی کی۔ خصوصی طور پر ان کی غزلوں کو عوام و خاص میں خاصی مقبولیت حاصل ہوئی۔ اس زمانہ میں ان کی کئی غزلیں عوام میں اس قدر مقبول تھیں کہ چھوٹے چھوٹے بچے اور جوان گلیوں میں گنگنایا کرتے۔ اسی مقبولیت کی بنا پر انہوں نے فلمی دنیا یعنی مایا نگر ی میں بھی قسمت آزمائی کی اور کئی فلموں…
مزید پڑھیں...

خبر و نظر: اِس شرارت کے پیچھے

آج کل مرکزی حکومت کو اس کی ضرورت اِس لیے بھی ہے کیوں کہ حکومت چو طرفہ مسائل میں بری طرح سے گھری ہوئی ہے۔ اس کی ریاستی سرکاریں بھی پریشان ہیں چنانچہ یہی وجہ ہے کہ حکومت سماج میں فساد پھیلانے والوں کے خلاف کچھ نہیں کہتی۔ بہت سوں کا خیال ہے کہ وزیر اعظم اِن شرارتیوں کو نصیحت اس لیے نہیں کر سکتے کیوں کہ وہ خود بھی اِسی راستے سے لائم لائٹ میں آئے ہیں۔…
مزید پڑھیں...

سازشی تھیوریز اور جدید سماج

سازشی تھیوریز سے ایک شکست خوردہ اور مایوسیت زدہ ذہنیت پیدا ہوتی ہے جو کسی مسئلہ کا تجزیہ کر کے کوئی لائحہ عمل کا اختراع نہیں کر سکتی بلکہ صرف راہ فرار اور بے عملی کے لیے راہیں ہموار کرتی ہیں۔ اس لیے ان سازشی تھیوریز کا بہت زیادہ سختی سے نوٹس لینے کا بھی کوئی خاص فائدہ نہیں ہوتا۔ کسی بھی سازشی تھیوری پر اگر تنقیدی نگاہ ڈالی جائے یا تھوڑا سا تجزیاتی…
مزید پڑھیں...

خود کفیل بھارت کے لیے دیہی معیشت کا استحکام ضروری

ابھی بھی ملک کا زرعی نظام دستکاروں اور دیہی کاریگروں پر ہی منحصر ہے۔ آج بھی بڑے پیمانے پر زرعی اوزاروں کی تیاری دیہی کاریگروں کے ذریعے ہی ہوتی ہے۔ اس طرح کاشت کاری کی طرح دستکاری میں بھی روزگار کے کافی امکانات ہیں۔ حکومت کو اس سمت میں بھرپور توجہ دینا چاہیے محض زبانی جمع خرچ اور جملہ بازی سے حالات نہیں بدلتے۔ ملک کی معیشت انتہائی سنگین دور سے…
مزید پڑھیں...

اوقاف کی ترقی وتحفظ سےبہار میں بَہار ممکن

سچ تو یہ ہے کہ آزادی کے بعد سے ملک میں وقف کی لڑائیاں چلتی آ رہی ہیں۔ زیادہ تر لڑائیاں وقف جائیدادوں کے ناجائز قبضوں کو لے کر ہیں لیکن بہار کی مہوا کی یہ لڑائی تھوڑی الگ ہے۔ یہ لڑائی وقف کی خالی پڑی ہوئی زمین کے بارے میں ہے کہ ان خالی زمینوں پر ڈیولپمنٹ کیا جائے تاکہ مقامی لوگوں کو اس سے روزگار ملے اور وقف کا جو اصل مقصد ہے وہ حاصل ہو۔
مزید پڑھیں...

نیشنل ٹیلنٹ سرچ اِگزامنیشن (NTSE)

دسویں کلاس کے امتحان میں شریک ہونے والے طلبا کےلیے نیشنل ٹیلنٹ سرچ اِگزام میں شرکت کرنے کا وقت آگیا ہے۔ آگردرجہ دہم کے طلبا چاہتے ہیں کہ مستقبل میں آنے والے تعلیم کے مشکل مراحل کو آسانی ہو ت وانھیں این ٹی ایس ای میں ضرور شرکت کرنی چاہئے۔ اس امتحان کا خاص مقصد ہے کہ ملک بھر سے ذہین ترین طلبا کو تلاش کرکے انھیں تعلیمی میدان میں آگے…
مزید پڑھیں...

ہفت روزہ دعوت ایک غیر منافع بخش ادارہ ہے۔ اعلیٰ اقدار کی حامل صحافت کے فروغ کے لیے اس کا تعاون کیجیے۔